حرمتوں کے بارے میں خدائی ضابطہ

  حرمتوں کے بارے میں خدائی ضابطہ

’’ اے بنی آدم! ہر عبادت کے موقع  پر اپنی زینت سے آراستہ رہو اور کھاؤ اور پیو،

اوراسراف نہ کرو۔ اللہ تعالیٰ اسراف کرنے والوں کو پسند نہیں کرتا،

اے رسول ان سے کہو، کس نے اللہ کی اس زینت کو حرام کر دیا جسے اللہ نے اپنے بندوں کے لیے نکالا تھا اور کس نے خدا کی بخشی ہوئی پاک چیزیں ممنوع کر دی ہیں۔ کہو ، یہ ساری چیزیں دنیا کی زندگی میں بھی اہل ایمان کے لیے ہیں ، اور قیامت کے دن توخالصتاً انہی کے لیے ہوں گی۔ اس طرح ہم اپنی باتیں صاف صاف بیان کرتے ہیں ان لوگوں کے لیے جو علم رکھنے والے ہیں۔ اے نبی کہدو کہ میرے رب نے جو چیزیں حرام کی ہیں وہ تو یہ ہیں :

بے حیائی کے کام ، خواہ کھلے ہوں یا چھپے ،

اورحق تلفی،

اورناحق زیادتی،

اوراس بات کو حرام ٹھہرایا ہے کہ تم کسی چیز کو اللہ کا شریک بناؤ جس کی اس نے کوئی دلیل نہیں اتاری،

اوریہ کہ تم اللہ کے نام پر کوئی ایسی بات کہوجس کا تمھیں علم نہ ہو۔‘‘

(الاعراف7 :32-33)

______***_____

Posted in Uncategorized | Tags , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , , | Bookmark the Permalink.

5 Responses to حرمتوں کے بارے میں خدائی ضابطہ

  1. noshaba says:

    ماشا اللہ بہت خوب لکھا ہے

  2. anonymous says:

    thanks for sharing…

  3. Amy says:

    Jazak Allah khair

  4. Rizwan Ahmed says:

    Jazakal Allah Sis very good Article

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *